اسلام آباد لوکل گورنمنٹ آرڈیننس کالعدم قرار
اسلام آباد ہائیکورٹ نے اسلام آباد لوکل گورنمنٹ آرڈیننس کو کالعدم قرار دے دیا۔ جسٹس محسن اختر کیانی نے سی ڈی اے مزدور یونین،... اسلام آباد لوکل گورنمنٹ آرڈیننس کالعدم قرار

اسلام آباد ہائیکورٹ نے اسلام آباد لوکل گورنمنٹ آرڈیننس کو کالعدم قرار دے دیا۔

جسٹس محسن اختر کیانی نے سی ڈی اے مزدور یونین، سی ڈی اے آفیسرز ایسوسی ایشن اور دیگر درخواستوں پر پہلے سے محفوظ فیصلہ سناتے ہوئے اسلام آباد لوکل گورنمنٹ آرڈیننس کو کالعدم قرار دیا۔

ہائیکورٹ کے فیصلے میں کہا گیا ہے کہ اسلام آباد کے بلدیاتی انتخابات نئے آرڈیننس کے تحت نہیں ہو سکتے، انتخابات پرانے لوکل گورنمنٹ ایکٹ کے تحت کرائے جائیں۔

درخواست گزاروں کی جانب سے لوکل گورنمنٹ ایکٹ کی موجودگی میں آرڈیننس کے ذریعے نیا بلدیاتی نظام لانے کو چیلنج کیا گیا تھا۔

حکومتی وکیل نے بتایا تھا کہ 19 نومبر کو پارلیمنٹ کا سیشن ختم ہوا، 23 نومبر کو آرڈیننس جاری ہوا۔

درخواستوں میں لوکل گورنمنٹ آرڈیننس میں چیئرمین کا کردار محدود کرنے پر بھی اعتراض اٹھایا گیا تھا اور آرڈیننس کے باقاعدہ قانون نہ بن پانے پر منتخب نمائندوں کے مستقبل پر بھی سوال اٹھایا گیا تھا۔

alphanew