بچوں کی آن لائن کلاس کیلئے غریب باپ نے کمائی کا واحد ذریعہ فروخت کردیا بچوں کی آن لائن کلاس کیلئے غریب باپ نے کمائی کا واحد ذریعہ فروخت کردیا
بھارت میں غریب باپ نے بچوں کی آن لائن کلاسز کی خاطر اسمارٹ فون خرید کے لیے اپنا واحد ذریعہ معاش فروخت کردیا۔ عالمگیر... بچوں کی آن لائن کلاس کیلئے غریب باپ نے کمائی کا واحد ذریعہ فروخت کردیا

بھارت میں غریب باپ نے بچوں کی آن لائن کلاسز کی خاطر اسمارٹ فون خرید کے لیے اپنا واحد ذریعہ معاش فروخت کردیا۔

عالمگیر وبا کورونا وائرس کی وجہ سے دنیا کے بیشتر ممالک میں تعلیمی ادارے چند ماہ سے بند ہیں جس کی وجہ سے زیادہ تر ممالک میں تعلیمی سرگرمیوں کو آن لائن کردیا گیا ہے۔

بھارت میں بھی کورونا کے باعث اسکول بند ہونےکی وجہ سے تعلیمی سرگرمیاں آئن لائن شروع کردی گئی ہیں لیکن آن لائن کلاسز میں زیادہ تر طلبہ کو انٹرنیٹ اور اسمارٹ فونز نہ ہونے جیسے مسائل کا سامنا ہے۔

بھارتی میڈیا کے مطابق ریاست ہماچل پردیش کے شہری کلدیپ کمار کے بچوں کو بھی اسکول انتظامیہ نے آن لائن کلاسز لینے کی ہدایت کی لیکن کلدیپ کے پاس اس کے لیے اسمارٹ فون میسر نہیں تھا۔

کلدیپ کمار کے چوتھی اور دوسری جماعت میں پڑھنے والے دونوں بچے اسمارٹ فون میسر نہ ہونے کی وجہ سے تعلیم حاصل کرنے سے قاصر تھے اور کلاس سے غیر حاضر تھے۔

کلدیپ کمار کو اسکول انتظامیہ نے ہدایت کی کہ اگر وہ اپنے بچوں کی تعلیم جاری رکھنا چاہتا ہے تو اسمارٹ فون خریدے تاکہ بچے آن لائن کلاسز شروع کرسکیں۔

بھارتی میڈیا کے مطابق غربت کے باعث کلدیپ کمار اسمارٹ فون خریدنے کی قوت نہیں رکھتا تھا جس پر اس نے 6 ہزار روپے کے لیے بینک سے قرض مانگا لیکن اس کے مالی حالات دیکھتے ہوئے بینک اور دیگر افراد نے بھی اسے قرض دینے سے انکار کردیا جس پر اس نے اپنا واحد ذریعہ معاشی گائے کو فروخت کردیا اور ان پیسوں سے بچوں کی تعلیم کے لیے اسمارٹ فون خریدا۔

alphanew